spot_img

ذات صلة

جمع

عمران خان اور اس کے ٹولے کو حکومت نہیں دی جاۓ گی، حکومتی فیصلہ

وزیراعظم شہباز شریف کی زیر صدارت اتحادی جماعتوں کے...

شمالی وزیرستان: دہشت گردوں کا ہاتھوں فوجیوں اور عوام کا قتل عام

اکستان کے صوبہ خیبر پختونخوا کےعلاقے شمالی وزیرستان میں...

الیکشن تب ہوں گے جب نواز شریف فیصلہ کرے گا: مریم نواز

پاکستان مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما مریم نواز...

پاکستان کو سری لنکا بنا دیں گے: شیخ رشید

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ اور سابق وزیرداخلہ شیخ...

شہباز شریف کا پیٹرول کی قیمت بڑھانے سے صاف انکار

وفاقی حکومت نے ایک بار پھر عوام کو سبسڈی...

تاخیر پر تاخیر، حمزہ مایوس گھر واپس

پاکستان کے صوبہ پنجاب کے نو منتخب وزیر اعلٰی حمزہ شہباز کی حلف برداری گورنر ہاؤس میں ایک مرتبہ پھر تاخیر کا شکار ہوگئی ہے۔ تاہم ضلعی انتظامیہ کا عملہ تاحال گورنر ہاؤس میں موجود ہے۔
واضح رہے کہ گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ نے عہدہ سنبھالنے کے بعد نو منتخب وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز شریف سے حلف لینے سے انکار کردیا تھا۔ 
جمعے کو لاہور ہائی کورٹ میں انہوں نے ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کی وساطت سے یہ بیان جمع کروایا تھا کہ وہ حمزہ شہباز کا حلف لینے سے قاصر ہیں۔ 
اس پر عدالت نے صدر مملکت کو حلف کے لیے نیا نمائندہ مقرر کرنے کے لیے کہا تھا۔
اس عدالتی حکم کے بعد عمر سرفراز چیمہ نے ایک ٹویٹ کے ذریعے اس حکم پر بغیر نام لیے تنقید کی اور کہا کہ ’وہ اپنا آئینی فرض پورا کررہے ہیں۔‘
عدالت میں ہونے والی سماعت کے بعد صدر ڈاکٹر عارف علوی نے حمزہ شہباز سے حلف لینے کے لیے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کو نامزد کیا ہے۔ 
اس حوالے سے صادق سنجرانی نے ایوان صدر میں صدر عارف علوی سے ملاقات بھی کی ہے۔
خیال رہے کہ گورنر ہاؤس میں حلف برادری کے انتظامات اسی روز سے کر لیے گئے تھے جب صوبائی اسمبلی نے نئے وزیراعلیٰ کا انتخاب کیا تھا۔
حمزہ شہباز 16 اپریل کو پنجاب اسمبلی میں بدترین ہنگامہ آرائی کے بعد 197 ووٹ لے کر وزیر اعلٰی منتخب ہوئے تھے، تاہم اگلے روز گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ نے اُن سے حلف لینے سے انکار کردیا تھا۔
spot_imgspot_img